گیلانی اور عمران خان میں کیا فرق ہے؟؟ حامد میر

وقت بہت تیزی سے گزرتا ہے۔ وقت کے ساتھ ساتھ انسان بھی بدل جاتے ہیں۔ یہ مارچ 2008کے آخری دن تھے۔ یوسف رضا گیلانی نے پاکستان کے 18ویں وزیراعظم کا حلف اٹھایا۔ ان کی کابینہ میں مسلم لیگ (ن) بھی شامل تھی۔ مسلم لیگ (ن) کے وزرا نے اپنے بازوئوں پر کالی پٹیاں باندھ کر…

قبروں سے نکل کر لڑنے والے،

حامد میر JANUARY 28, 2021  یہ ایک ایسی لڑائی کی کہانی ہے جو 1950میں شروع ہوئی ۔اس لڑائی کا ایک فریق ہر قسم کے اسلحے اور وسائل سے مالا مال ہے ۔دوسرے فریق کے پاس صرف قلم اور کیمرہ ہے۔ ایک فریق کا نام حکومت ہے اور دوسرا فریق صحافی ہیں۔ حکومت ان صحافیوں کو سچ…

طبلِ جنگ بج چکا ہے

نواز شریف نے اے پی سی میں گفتگو کا آغاز وہیں سے کیا جہاں سے وقفہ شروع ہوا تھا۔ (فوٹو: ٹوئٹر) نواز شریف ایک بار پھر اسٹیبلشمنٹ سے ٹکر لینے کی مہم پر جتے ہوئے ہیں۔ ووٹ کو عزت دو کے پیچھے جو مطالبہ پوشیدہ ہے وہ اب اتنا مخفی نہیں رہا۔  سب کو پتہ…

وہ کب آئے گا؟

اُس نے سیاست کرنی ہے تو اسے واپس تو آنا ہوگا، اُسے اچھی طرح سے علم ہے کہ اُس کا ووٹ بینک موجود ہے، اِس ووٹ بینک کو قائم رکھنا ہے تو اُس کے لئے قابلِ یقین بیانیے کی بھی ضرورت ہے۔ ووٹ بینک اُسی دن تک قائم رہتا ہے جس دن تک اُمید قائم…

ہاٹ منی کے حامی کدھر گئے؟

تحریر: رؤف کلاسرا مارچ میں وزیراعظم عمران خان کی پریس بریفنگ کے بعد مشیر خزانہ حفیظ شیخ نے کورونا کی احتیاط ایک طرف رکھتے ہوئے میرا ہاتھ پکڑا کر اپنے تئیں میرا مذاق اڑاتے ہوئے کہا: سنا ہے آپ آج کل اپنے یوٹیوب چینل پر بڑی بڑی خبریں بریک کررہے ہیں۔ کورونا کی سوشل ڈسٹنسنگ…